قومی

  • قومی
  • Apr 14, 2021

پاکستان اور ازبکستان کا ورچوئل اجلاس

وزیر اعظم عمران خان اور ازبکستان کے صدر شوکت میرمونووچ مرزیوف ا ٓج ورچوئل اجلاس میں شریک ہونگے ۔ ورچوئل سمٹ کے میں دونوں رہنما سیاسی ، تجارتی ، معاشی تعلقات، سلامتی کی صورتحال سمیت عوامی رابطوں اوردوطرفہ تعاون کا جائزہ لیں گے۔
دونوں فریقین سیاسی اور تزویراتی روابط کو بڑھانے ، راہداری اور تجارتی تعاون، تعلیم اور ثقافتی تعاون کے فروغ پر بھی بات چیت کریں گے۔ رواں سال کےآغازمیں پاکستان ، ازبکستان اور افغانستان کےدرمیان متفقہ ٹرانس افغان ریلوے منصوبہ بھی بات چیت کا اہم موضوع ہوگا ۔
دونوں رہنما دوطرفہ امور کے علاوہ ، اہم علاقائی اور بین الاقوامی امور پر تبادلہ خیال جبکہ بین الاقوامی اور علاقائی سطح پر باہمی تعاون اور ہم آہنگی بڑھانے پر بھی غور کریں گے۔ورچوئل سمٹ دونوں ملکوں کو مشترکہ دلچسپی کے تمام شعبوں میں موجودہ دوطرفہ تعاون کو مزید فروغ دینے کا موقع فراہم کرے گا۔
پاکستان اور ازبکستان کے مابین گہرےمشترکہ مذہبی تاریخی اور ثقافتی تعلقات ہیں۔وزیر اعظم عمران خان اور ازبکستان کے صدر اس سے قبل اپریل 2019 کو بیجنگ میں بیلٹ اینڈ روڈ انیشی ایٹو (بی آر آئی) فورم پر اورجون 2019 میں بشکیک میں ایس سی او رکن ملکوں کی کونسل کے سربراہوں کے اجلاس کے دوران ملاقاتیں کرچکے ہیں۔
دونوں ملکوں کے درمیان باہمی روابط میں گزشتہ دو سال کے دوران ہر سطح پر اضافہ ہواہے۔ ازبکستان کے وزیر خارجہ نےگزشتہ ماہ پاکستان کا دورہ کیا جس میں انہوں نے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سے دوطرفہ بات چیت کی۔انہوں نےوزیر اعظم سے بھی ملاقات کی اور جولائی 2021 میں تاشقند میں ازبکستان کے زیر اہتمام وسطی ایشیاء جنوبی ایشیاء علاقائی رابطہ کانفرنس میں شرکت کی دعوت بھی دی۔