بین الاقوامی

  • بین الاقوامی
  • Nov 07, 2019

فرانس کے صدرمیکرون اور چین کے صدر شی چن پنگ کی بیجنگ میں ملاقات

چین اور فرانس نے عالمی ماحولیاتی معاہدے کی حمایت کا اعادہ کرتے ہوئے اسے ناقابل تنسیخ قراردیا ہے۔امریکہ نے چند روز قبل معاہدے سے علیحدہ ہونے کا اعلان کیاہے۔
اس بات کا اعلان فرانس کے صدر ایمانوئل میکرون اور چین کے صدر شی چن پنگ کے درمیان بیجنگ میں ملاقات کے بعدجاری ہونے والے مشترکہ اعلامیے میں کیا گیا۔ چین اور فرانس نے اس سال جی ٹونٹی اجلاس میں بھی ماحولیاتی تبدیلی سے متعلق ہرممکن کوشش جاری رکھنے کے عزم کا اظہار کیا تھا۔ملاقات کے بعد صدر شی چن پنگ نے کہا کہ فرانسیسی صدر کے دورے سے کثیرالجہتی دو طرفہ تعلقات اور آزاد تجارت کو فروغ حاصل ہو گا۔ دونوں صدور نے اس بات پر بھی اتفاق کیا کہ مشترکہ کوششوں سے آزاد معیشت کو تقویت دی جائے گی۔صدر میکرون نے چین کے دورے کے آغاز پر کہا تھا کہ یورپی یونین اور چین کے درمیان ایسا سمجھوتہ طے پایا ہے جس کے بعد زرعی مصنوعات پر پابندی کا امکان نہیں رہا۔ فرانسیسی صدر کے چین کےدورے کے دوران چین اور فرانس نے پندرہ ارب ڈالر مالیت کے مختلف سمجھوتوں کو حتمی شکل دی گئی ہے۔