قومی

  • قومی
  • May 15, 2019

وزیراعظم آفس اسلام آباد سے چیف سیکرٹری بلوچستان کو مراسلہ

وزیراعظم آفس اسلام آباد سے چیف سیکرٹری بلوچستان کو مراسلہ بھیجا گیا ہے جس میں شکایات کا بروقت ازالہ نہ کرنے پر مایوسی کا اظہار کیا گیا ہے۔۔مراسلے کے مطابق بلوچستان کے سرکاری افسران اور دوسرےاہلکار شکایات کے ازالے میں کوتاہی برت رہے ہیں۔تمام صوبوں میں بلوچستان شکایات کے ازالے میں سب سے پیچھے ہے۔ مراسلے میں کہا گیا ہے کہ پاکستان سیٹیزن پورٹل پر شکایات کے ازالے کی مانیٹرنگ کیلئے وزیراعظم مانیٹرنگ سیل قائم کیا گیا ہے جہاں تمام صوبوں کی کارکردگی کو جانچا جارہا ہے۔اور سیٹیزن پورٹل پر شکایات کے ازالے کے حوالے سے وقتاً فوقتاً وزیر اعظم پاکستان کو آگاہ کیا جارہا ہے۔
بلوچستان حکومت نے کل 4791 شکایات میں 800 شکایات حل کی ہیں جو کہ محض17فیصد بنتا ہے۔اسی طرح 4791میں 1152شکایات زائدالمیعاد ہیں جو 24فیصد بنتی ہیں۔صوبہ بلوچستان میں سرکاری دفاتر کو 53پورٹل اکاؤٹنس دیئے گئے ہیں جن میں 41اکاؤنٹس کی کارکردگی صفر ہے۔ مراسلے میں مزید کہا گیا ہے کہ سرکاری افسران اور اہلکاروں کی آسانی کیلئے ان کو گائیڈ لائن بھی مہیا کی گئی ہے،لیکن پھر بھی کارکردگی تسلی بخش نہیں۔ مراسلے میں چیف سیکرٹری کو ہدایت کی گئی ہے کہ عوام کے مسائل کو حل کرنا اور ان کے لئے آسانیاں پیدا کرنا وزیراعظم پاکستان کا مشن ہے۔غفلت کے مرتکب اہلکاروں کے خلاف قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے۔