قومی

  • قومی
  • May 20, 2017

اسحاق ڈار سے جنوبی ایشیاء کے لیے عالمی بینک کی نائب صدرکی ملاقات

وزیرخزانہ اسحاق ڈار سے جنوبی ایشیاء کے لیے عالمی بینک کی نائب صدراینیٹ ڈکسن نے اسلام آباد میں ملاقات کی ۔جس میں پاکستان میں عالمی بینک کی مجموعی سرمایہ کاری سمیت بینک کے تعاون سے جاری ترقیاتی منصوبوں پرتبادلہ خیال کیا گیا۔
وزیرخزانہ اسحاق ڈارنے عالمی بینک کی نائب صدر کے دورہ پاکستان کا خیرمقدم کرتےہوئے انہیں مختلف منصوبوں میں عالمی بینک کی معاونت سے آگاہ کیا۔وزیرخزانہ نے بیجنگ میں حال ہی میں" ون بیلٹ ون روڈفورم" کے موقع پر عالمی بینک کے صدرسے اپنی ملاقات کے بارے میں بھی بتایا۔وزیرخزانہ نے کہا کہ حکومتی اصلاحات کے نتیجے میں ملک میں معاشی استحکام کا حصول ممکن ہوا ہے ۔ اب بلند،پائیدار اورجامع ترقی کے حصول پرتوجہ مرکوز ہے۔رواں مالی سال شرح نمو دس سال کی بلندترین سطح پانچ اعشاریہ دوآٹھ فیصدپرپہنچ گئی ہے۔
وزیرخزانہ نے کہا کہ توانائی کے منصوبوں پرترجیحی بنیادوں پرکام جاری ہے،مارچ دوہزاراٹھارہ تک دس ہزارمیگاواٹ بجلی قومی نظام میں شامل ہوگی ،جس سے لوڈشیڈنگ کے خاتمے میں مدد ملے گی۔انہوں نے کہا کہ آئندہ مالی سال کے بجٹ کی تیاری کو حتمی شکل دی جارہی ہے۔
عالمی بینک کی نائب صدر اینیٹ ڈکسن نے حکومت کی جانب سے اقتصادی اصلاحات پرکامیابی سے عمل درآمدکا اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے ساتھ ترقیاتی شراکت داری کے لیے پرعزم ہیں۔انہوں نے کہا کہ عالمی بینک توانائی کے شعبے میں قابل تجدید منصوبوں میں کام کرنے میں دلچسپی رکھتا ہے۔انہوں نے کہا کہ حالیہ برسوں کے دوران پاکستان اورعالمی بینک کی شراکت داری مضبوط ہوئی ہے ۔