قومی

  • قومی
  • Dec 07, 2017

ٹھٹھہ میں کشتی الٹنےسے سترہ افراد ڈوب کر جاں بحق

ٹھٹھہ میں بوھاراکےقریب گہرےسمندر میں زائرین کی کشتی الٹنےسے سترہ افراد ڈوب کر جاں بحق ہو گئے۔کشتی میں خواتین اور بچوں سمیت ستر سےزائدافرادسوارتھے۔ڈی سی ٹھٹھہ کےمطابق سینتالیس افرادکوریسکو کےذریعےبچالیا گیاہے۔بارہ افراد کوکراچی جبکہ آٹھ افراد کو مکلی کےاسپتال میں منتقل کردیاگیا۔زائرین پیر پٹھو کی درگاہ پر حاضری کے لیے جارہے تھے۔
سندھ کےوزیراعلی سید مراد علی شاہ نےکشتی ڈوبنے کے حادثے کا نوٹس لیتےہوئےانسانی جانی نقصان پرگہر ےدکھ اور افسوس کا اظہار کیاہے۔ انہوں نے کمشنر حیدرآباد کو ہدایت کی کہ وہ ریسکو کےکام کو فوری طورپر تیز کریں ۔۔وزیراعلی نے ٹھٹھہ کے اسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کرنےکا اعلان کیا ہے۔
پاک بحریہ نےڈوبنےوالےافراد کو بچانے کے لیے غوطہ خوروں اور میڈیکل اسٹاف روانہ کردیا ہے ۔ متاثرین کو محفوظ مقامات پر منتقل کرنےکےلیے زولو بوٹس بھی استعمال کی جارہی ہیں ۔۔
پاک بحریہ کےترجمان کے مطابق بحریہ کی ٹیمیں ریسکو اور امدادی کاموں میں معاونت کررہی ہیں ۔