قومی

  • قومی
  • Nov 14, 2017

سابق وزیراعظم محمدنوازشریف کے تینوں ریفرنسز کویکجاکرنے کامعاملہ

اسلام آبادہائی کورٹ نے سابق وزیراعظم محمدنوازشریف کی جانب احتساب عدالت میں جاری ٹرائل کے حکم امتناع کی استدعا مستردکردی ہے ۔عدالت نے نیب کو نوٹس جاری کرتے ہوئے ریفرنسز یکجاکرنے کے معاملے پر پیرتک جواب طلب کرلیا ۔سابق وزیراعظم کے وکیل اعظم تارڑ نے عدالت میں موقف اختیارکیاکہ گواہان مشترک ہونے کاہمارا موقف پہلے بھی تھا ۔انہوں نے کہاکہ دوریفرنسز میں الزامات نیب آرڈیننس کی شق نائن اے فائیو کے تحت لگائے گئے ہیں یہ شق اثاثوں کے نامعلوم ذرائع سے متعلق ہے ۔عدالت کے استفسار پر سابق وزیراعظم کے وکیل اعظم تارڑ نے واضح کیاکہ ریفرنسز کے جوائنٹ ٹرائل کے حوالے سپریم کورٹ اورہائی کورٹ میں دائردرخواستوں میں جوموقف اپنا گیا اس میں فرق ہے ۔ دلائل سننے کے بعد عدالت نے نیب کونوٹس جاری کرتے ہوئے تینوں ریفرنسز کویکجاکرنے کی درخواست کی سماعت پیرتک ملتوی کردی ۔سماعت جسٹس عامر فاروق اور جسٹس محسن اخترکیانی پر مشتمل ڈویژنل بنچ نے کی