قومی

  • قومی
  • Sep 25, 2017

عمران خان کے خلاف توہین عدالت کیس میں الیکشن کمیشن نے فیصلہ محفوظ کرلیا

پی ٹی آئی کے سربراہ عمران خان کے خلاف توہین عدالت کیس میں الیکشن کمیشن نے فیصلہ محفوظ کرلیا۔ چیف الیکشن کمشنر کی سربراہی میں چار رکنی کمیشن نے کیس کی سماعت کی ۔
عمران خان کی جانب سے ان کے وکیل بابر اعوان کمیشن کے سامنے پیش ہوئے اور عمران خان کے وارنٹ گرفتاری معطل کرنے سے متعلق اسلام آباد ہائی کورٹ کا حکم نامہ پیش کیا۔ انہوں نے موقف اختیار کیا کہ اسلام آباد ہائی کورٹ کا فل بنچ الیکشن کمیشن کے توہین عدالت کے اختیار سے متعلق سماعت کل کرے گا۔انہوں نے کہاکہ عمران خان کے وکیل معافی مانگ چکے ہیں اس لیے شوکاز نوٹس واپس لیاجائے۔ چیف الیکشن کمشنر نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ عمران خان کو تین سال تک مہلت دی جاتی رہی ہے ۔
درخواست گزار اکبر ایس بابر کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ عمران خان کے وکیل نے اپنے جواب میں "غیرمشروط معافی " کے الفاظ استعمال نہیں کیے اور انہوں نے حال ہی میں کراچی میں اپنے خطاب میں ایک بار پھر الیکشن کمیشن کے خلاف انتہائی نازیبا زبان استعمال کی۔اس لیے ان کے خلاف توہین عدالت کا شوکازنوٹس واپس نہ لیاجائے ۔
کمیشن نے فریقین کا موقف سننے کے بعد فیصلہ محفوظ کرلیا۔