قومی

  • قومی
  • Dec 12, 2019

وزیر اعظم عمران خان کی زیرصدارت اسلام آبادمیں اجلاس

وزیرِ اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ کم آمدن والے ا ورکچی بستیوں کے رہائشیوں کو جدید سہولتوں سے آراستہ سستے گھروں کی فراہمی حکومت کی ترجیح ہے۔شہروں میں کچی بستیوں میں کثیر المنزلہ عمارتوں کی تعمیر سے رہائش کا مسئلہ حل ہو گا اور کمرشل پلازوں سے حاصل ہونے والی آمدن سے غریب افراد کو سستے گھر وں کی فراہمی کے لئے استعمال کیا جا سکے گا۔
انہوں نے یہ بات اسلام آباد میں وفاقی حکومت کی ملکیت غیراستعمال شدہ قیمتی اراضی کو مثبت طریقے سے بروئے کارلانےسےمتعلق جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی۔
وزیرِ اعظم نےاس معاملے پر اب تک کی پیش رفت پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ سالہا سال سے غیر استعمال شدہ بیش قیمت سرکاری اراضی کو عوامی فلاح کیلئےاستعمال کرنا حکومتی پالیسی کااہم جزو ہے۔بڑے شہروں کےمرکزی مقامات پرواقع قیمتی املاک کوکم آمدنی والےطبقےکیلئے گھروں،سکولوں اور ہسپتالوں کی تعمیرکیلئےاستعمال کیاجائےگااور حاصل ہونےوالی آمدنی کوبھی عوامی سہولیات کی فراہمی پرخرچ کیا جائےگا۔
وزیراعظم نےہدایت کی کہ نشاندہی کی گئی اراضی کی تمام تفصیل نیا پاکستان ہاؤسنگ اتھارٹی کو فراہم کی جائے۔تمام وزارتوں میں موجود املاک کوعوامی فلاح کیلئےبروئے کارلانے کیلئےقوانین میں ترمیم کےعمل کو ایک ہفتے میں مکمل کیاجائے۔اجلاس میں چیئرمین نیا پاکستان ہاؤسنگ اتھارٹی نےکم آمدنی والےافراد کیلئے گھروں کی تعمیر کے منصوبے پر پیش رفت سےآگاہ کیا۔سیکرٹری نجکاری نے بتایا کہ مختلف وزارتوں کی جانب سے32املاک کی نشاندہی کی گئی ہے جن میں سے27مکمل دستیاب ہیں۔